Home / Islamic / دن میں کسی بھی وقت یہ اسم 11 بار پڑھ لیں

دن میں کسی بھی وقت یہ اسم 11 بار پڑھ لیں

سید نا انس رضی اللہ تعالیٰ عنہ کہتے ہیں،کہ نبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی اکثر دعا یہ تھی،(اللَّهُمَّ رَبَّنَا آتِنَا فِي الدُّنْيَا حَسَنَةً وَفِي الْآخِرَةِ حَسَنَةً وَقِنَا عَذَابَ النَّارِ)ترجمہ:اے اللہ ہمیں دنیا میں بھلائی عطا کر،اور آخرت میں بھلائی عطا کر،اور ہمیں دوزخ کے عذاب سے بچا۔صحیح بخاری:جلد سوم:حدیث نماگر ہم اس دعا کے فوائد کو ذہن میں اس طرح رکھ کے پڑھیں ان شاء اللہ اور فائدہ ہو گا• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو مجھے فتنے میں مبتلا نہ کر دے• اے ال مزید جاننے کے لیے نیچے ویڈیو پر کلک کریں

اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو مجھے اولیاء کی محبتوں سے دور نہ کر دے• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو مجھے ماں باپ کی نافرمانی میں مبتلا نہ کر دے• اے اللہمجھے ایسی دنیا عطافرما جو مجھے ذلت گناہوں ظلمت اور عسیان میں مبتلا نہ کر دے• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو بہترین ہو، ایسی دنیا جو میری نسلوں کے کام آئے• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو عافیت والی رحمت والی برکت والی ہو• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو سکھ والی ہوپریشانیوں سے دور فرما• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرماجو بہترین لاجواب اورنہ ختم ہونے والی ہو• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جس میں برکت وسعت اور عافیت ہو• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو قیامت تک میری نسلوں کی کفایت کردے• اے اللہ مجھے ایسی دنیا عطافرما جو تیری شان کے مطابق ہو اپنی شان کے مطابق عطافرما• اے اللہ مجھےجنت عطافرما توجنتالفردوسعطافرما،اپنی شان کےمطابق عطافرماآمینبیٹیوں کی بہترین نشو و نما اور تربیت کے ثمرات اور فوائد نہ صرف آخرت میں عطا کئے جائیں گے بلکہ اس دنیا ہی میں اس کے بہترین نتائج برآمد ہوں گے اور یہ ایک مسلمہ حقیقت ہے کہ اللہ تعالیٰ اس صالح و متقی شخص کو اپنی نعمتوں سے نوازے گا جو اپنی دو بیٹیوں کی پرورش انہیں عفت و پاکدامن اور صالح بناتے ہوئے کرے۔ دراصل بیٹی، اللہ تعالیٰ کی جانب سے عطاکردہ ایک بہترین عطیہ و فضل اور بہت بڑے اعزاز کی حامل نعمت ہے۔ لڑکیاں، اعزاز و اکرام اور لڑکے، نعمتِ خداداد اور فضلِ الٰہی کا بہترین ذریعہ ہوتے ہیں اور یہ ایسا اعزاز ہے کہ روزِ قیامت میں ان نعمتوں کو نامہ اعمال میں بندے کے حق میں پیش کیا جائے گا۔

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے:وَقَالَ رَبُّكُمُ ادْعُونِي أَسْتَجِبْ لَكُمْ ۚ إِنَّ الَّذِينَ يَسْتَكْبِرُونَ عَنْ عِبَادَتِي سَيَدْخُلُونَ جَهَنَّمَ دَاخِرِينَ )ترجمہ ” اور تمہارے رب کا فرمان (سرزد ہوچکا ہے) کہ مجھ سے دعا کرو میں تمہاری دعاؤں کو قبول کروں گا یقین مانو کہ جو لوگ میری عبادت سے خودسری کرتے ہیں وه ابھی ابھی ذلیل ہوکر جہنم میں پہنچ جائیں گے۔”وَإِذَا سَأَلَكَ عِبَادِي عَنِّي فَإِنِّي قَرِيبٌ ۖ أُجِيبُ دَعْوَةَ الدَّاعِ إِذَا دَعَانِ ۖفَلْيَسْتَجِيبُوا لِي وَلْيُؤْمِنُوا بِي لَعَلَّهُمْ يَرْشُدُونَ )ترجمہ ” جب میرے بندے میرے بارے میں آپ سے سوال کریں تو آپ کہہ دیں کہ میں بہت ہی قریب ہوں ہر پکارنے والے کی پکار کو جب کبھی وه مجھے پکارے، قبول کرتا ہوں اس لئے لوگوں کو بھی چاہئے کہ وه میری بات مان لیا کریں اور مجھ پر ایمان رکھیں، یہی ان کی بھلائی کا باعث ہے۔”نعمان بن بشیر رضی اللہ عنہما کہتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ”بیشک دعا ہی عبادت ہے، پھر آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے یہ آیت تلاوت فرمائی”وقال ربكم ادعوني أستجب لكم”اور تمہارے رب نے کہا: دعا کرو (مجھے پکارو)میں تمہاری دعا قبول کروں گا (سورة الغافر: 60)سلمان فارسی رضی الله عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ”اللہ “حيي كريم”ہے یعنی زندہ و موجود ہے اور شریف ہے اسے اس بات سے شرم آتی ہے کہ جب کوئی آدمی اس کے سامنے ہاتھ پھیلا دے تو وہ اس کے دونوں ہاتھوں کو خالی اور ناکام و نامراد واپس کر دے“۔سنن ابی داود/ الصلاة 358 (1488) وتر کے فروعی احکام و مسائل، باب: دعا کا بیان ۔شیخ البانی رحمہ اللہ نے اس حدیث کو صحیح قرار دیا

About admin

Check Also

Centrally located in Niagara Falls- Clifton Victoria Inn at the Falls

Clifton Victoria Inn at the Falls offers a satisfied, peaceful and sustaining stay. The hotel …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *