Home / Islamic / بھولنے کی بیماری کیسے ختم کی جائے؟ دماغ اور یادداشت تیز کرنے کا وظیفہ

بھولنے کی بیماری کیسے ختم کی جائے؟ دماغ اور یادداشت تیز کرنے کا وظیفہ

انسان کی بہترین کارکردگی کا دارومدار اس کی دماغی صحت پر ہوتا ہے انسان کی ذہنی صحت اس کی سوچنے محسوس کرنے اور ردعمل ظاہر کرنے کی صلاحیت کو متاثر کرتی ہے دوستو آج ہم آپ کے ساتھ بات کرنے جارہے ہیں کہ کمزور دماغ کو کس طرح سے تیز کیا جا سکتا ہے۔ حضرت علی رضی اللہ کی زندگی سے کیا نسخہ ملتا ہے جس سے انسان اپنے دماغ کو تیز کر سکتا ہے اور سائنس اس بارے میں کیا کہتی ہے سائنس کے ذریعے کیا چیزیں سامنے آئی ہیں جس کی وجہ سے انسان بڑھاپے میں جاکر اس کی یاداشت کمزور ہو جاتی ہے اس کی کیا وجوہات ہیں وہ بھی آپ کے سامنے رکھیں گے مکمل جاننے کے لیے نیچے کلک کریں

لیکن آپ کو یہاں پر یہ بتائیں کہ حضرت علی رضی اللہ کے حوالے سے یہ مشہور ہے کہ وہ مسجد کے ممبر پر بیٹھا کرتے تھے اور کہا کرتے تھے کہ کون ہے جو آئے مجھ سے سوال کرے بہت سے لوگ ان کے پاس آتے تھے سوالات لے کر اپنے مسائل لے کر حضرت علی رضی اللہ کو ان کے تمام سوالوں کا انہیں جواب دیتے تھے اور کہا جاتا ہے کہ کوئی ایسا شخص نہیں تھا جو حضرت علی رض اللہ کی بارگاہ سے خالی ہاتھ واپس لوٹتے ہو یعنی کہ اس کو اس کے سوال کا جواب نہ ملا ہو۔ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ٹھیک کہا کہ اگر میں علم کا شہر ہوں علی اسکا دروازہ ہے یعنی حضرت علی کے پاس ایک خزانہ موجود تھا وہ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے حاصل کیا ہوا تھا حضرت علی اس کا دروازہ تھے۔ حضرت علی رضی اللہ کو مسجد میں تشریف فرما تھے ایک شخص آیا اورعرض کرنے لگا امیرالمومنین میں باتوں کو بھول جاتا ہوں میرا دماغ تیز نہیں یہاں تک کہ قرآن پاک بھی یاد کرنے میں مشکل ہوتی ہے کوئی ایسا عمل جو کوئی ایسی دعا بتائیں جس سے میرا دماغ تیز ہو جائے میری یاداشت تیز ہو جائے اس شخص کا یہ سوال سن کر حضرت علی رضی اللہ عنہ نے فرمایا اے شخص یاد رکھنا تم جو بھی رزق کھائواس پر ایک مرتبہ یا علیم اور ایک مرتبہ یا اللہ کا ورد کرکے اس پر دم کرکے اس کے بعد کھاؤ اللہ کے کرم سے تمہارا دماغ تیز ہوگا اور فجر کی نماز کے بعد آسمان کی طرف دیکھ کر یا علیم اور یا اللہ کا ورد کر کے دعا کرو انشاء اللہ تم باتوں کو نہیں بھولا کرو گے حضرت علی نے یہ جو نسخہ بتایا ہے اس پرعمل کرکے انسان اپنا دماغ تیزکرسکتا ہے

دوستو صحت کے حوالے سے یاداشت کی کمزوری میں آس پاس کے ماحول کا ایک اہم کردار ہوتا ہے یاداشت کے مسائل عمر کے کسی بھی حصے میں واقع ہو سکتے ہیں عام طور پر اس مسئلے کی علامات تیس سال کے بعد ظاہر ہوتی ہیں خوراک اور عادات میں تبدیلی کرکے اور روز سے اس بیماری کا علاج ممکن ہے جس کی وجوہات میں کہا جاتا ہے کہ قوت یاداشت کمزور ہونے کی وجوہات میں سے ایک بنیادی وجہ کوئی بڑا حادثہ یا موروثی طور پر واقع ہونے والی زہنی کمزوری ہے ماہرین کے مطابق نوجوان کے منفی اور مثبت صحت عادات دیر تک سونا اور جاگنا زیادہ شوقی مباشرت چکنائی اور غلیظ غذاؤں کا استعمال بڑھاپے میں یاداشت کمزوری کی وجہ بنتی ہے بے خوابی کی شکایت صبح اٹھ کر سر میں درد ہونا دن بھر جسم بوجھل رہنا سوتے میں سانس پھولنا خراٹے لینا قوت یاداشت کی کمزوری کی واضح علامات اور وجوھات ہو سکتی ہیں جو افراد نیند کی گولیاں اینٹی ڈپریشن اور سر درد کی گولیوں کا استعمال کرتے ہیں کولیسٹرول کم کرنے والی دعائیں ذیابطیس کی دوا استعمال کرتے ہیں تو یہ ذہنی کمزوری یا بھولنے کی شکایت ہوسکتی ہے مستقل افسوردگی مایوسی تنہائی اورذہنی تناؤ کا شکار افراد کی قوت یاداشت جلد متاثر ہوتی ہے مستقل بلڈ پریشر ہائی رہنے کے باعث دماغ کی رگوں میں خون جم جاتا ہے جس کے باعث دماغ اپنے کام بھر پور طریقے سے انجام نہیں دے پاتا اور قوت یاداشت کمزور ہوجاتی ہے دماغ کی رسولی یہ سر پر گہری چوٹ لگنے سے بھی قوت یاداشت کمزور ہوتی ہے خون میں گلوکوز کی مقدار کم ہونے کی وجہ سے بھی قوت یاداشت کمزور پڑ جاتی ہے تو یہاں پر آپ کو یہ بتاتے ہیں کہ کیا احتیاط کرنی چاہیے اور اس کا علاج کس طرح سے ممکن ہے

جن لوگوں کا دماغ اور اعصاب کمزور ہوگئے ہیں انہیں نہار منہ دیر تک سیب چبا کر کھانا چاہیے سر پر گرم گھی کی مالش کرنے سے بھی قوت یاداشت بھی اضافہ ہوتا ہے گلاب کا قلند بھی کھانے سے قوت یادداشت میں اضافہ ہوتا ہے جس طرح جسم کے پٹھوں کو مضبوط بنانے کے لیے ورزش کی ضرورت پڑتی ہے اسی طرح دماغ کو چاک و چوبند رکھنے کے لیے بھی ورزش کی ضرورت پڑتی ہے جسمانی ورزش بھی دماغ کو تقویت دیتی ہے ایسی ورزش جس سے آنکھوں اور ہاتھوں کا بے وقت ربت ہو اوراس سے دماغ کے حلوے مضبوط ہوتے ہیں ماہرین کے مطابق آٹھ گھنٹے سے زیادہ سونے والے افراد اپنی قوت یاداشت کمزور کر لیتے ہیں اور جلد بوڑھے ہو جاتے ہیں روزانہ سونے کے اوقات میں پابندی کریں اور چھٹی کے دن کی جاگنے اور سونے کے مکر معمول کی پابندی کریں سونے سے پہلے ٹی وی کمپیوٹر اور موبائل کا استعمال نہ کریں اس سے نکلنے والی نیلی شوعائیں نیند میں خلل پیدا کرتی ہے جس سے دماغ بوجل رہتا ہے افسردگی اور مایوس انسان پر بڑھاپا طاری کردیتی ہے اور چونکہ حنسنا کہکا لگانا بھی ایک ورزش ہے اس لیے دن کے زیادہ اوقات خوش ہو کر گزاریں اپنی غلطیوں پر خود مسکرانا سیکھیں قوت و یاداشت بڑھانے کے لیے صحت کو متحک رکھنا بہت ضروری ہوتا ہے مختلف گیم کھیلنے سے بھی آپ کا دماغ جو ہے وہ تیز ہوتا ہے چکنی غذائیں چربی والا گوشت کھانے سے پرہیز کریں اینٹی آکسائیڈنٹ سے بھرپور پھل کھائیں اور یہ چیزیں آپ کے لیے بہت ضروری ہے وٹامن بی اور وٹامن ای سے بھرپور غذائیں جن میں ہری سبزیاں میں شامل ہوتے ہیں خانے میں یادداشت میں اضافہ کرتے ہیں امیگا تھری کا استعمال کریں یہ بہت زبردست ہے یہ آپ کی صحت کے لئے بہت ہی فائدہ مند ہوتا ہے دوستوں اس ویڈیو میں ہم نے آپ کو حضرت علی رضی اللہ کی زندگی سے ملنے والا ایک اور واقعہ بھی بتایا ہے جس پر عمل کرکے ہم اپنی یاداشت کو تیز کرسکتے ہیں ساتھ ہی ہم نے آپ کو سائنس اور میڈیکل جو کہتی ہے کن وجوہات کی وجہ سے کمزور ہوتی ہیں وہ بھی آپ کو بتائی ہیں اچھی بات شئیر کرنا صدقہ جاریا ہے عمل اچھا لگا ہو تو لازمی شئیر کریں

About admin

Check Also

Look Into All Aspects When You Compare Personal Loans

Purchasing a dream home has become convenient with many online websites of lending institutions and …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *