Home / Islamic / وہ کام جوجسے ہم پورا ہونا دیکھنا چاہتے ہیں وہ نہیں دیکھ پاتے یہ تحریر ضرور پڑھیں

وہ کام جوجسے ہم پورا ہونا دیکھنا چاہتے ہیں وہ نہیں دیکھ پاتے یہ تحریر ضرور پڑھیں

وہ کام جوجسے ہم پورا ہونا دیکھنا چاہتے ہیں وہ نہیں دیکھ پاتےاللہ تعالی اپنے بندوں کو کبھی اکیلا نہیں ہے چھوڑتا اوراللہ تعالی نے رہنمائی کی شکل میں ہمارے لئےایک ایسی بہترین کتاب عطاء کی ہے ہمیں ہزاروں قسم کے مسائل ہوں بیٹےکی طرف سے کوئی مسائل ہو گھرکی کوئی پریشانی ہوباہرکی کوئی پریشانی ہو
آفس کی کوئی پریشانی ہونوکری نہ لگ رہی ہوحتہ کہ ہزاروں لاکھوں مشکلات انسان پرایسی آتی ہیں کہ جب وہ ساری دنیا سے مایوس ہوجاتا ہے کیونکہ رب کے علاوہ ایک اللہ پاک ہی ہیں جوانسان کی ہروقت مدد کےلئے تیارہوتے ہیں اس لئے جب انسان اپنےاللہ کی طرف متوجہ ہوتا ہے اپنے رب کو یاد کرتا ہے اللہ اس کی ہزاروں حاجاتوں کو پورا فرما دیتا ہے۔ اللہ پاک نے اپنے نبی حضرت موسیٰ علیہ السلام کو وہ کلمات عطاء کئے تھے جو وہ دن میں سات مرتبہ پڑھتے تھے ہردن سات مرتبہ پڑھتے تھے اورجو بھی اللہ پاک سے مانگتے تھے اللہ پاک ان کو عطاء فرماتے تھے۔ یہ ایسا وظیفہ ہے جوآپ کے سارے مطالبوں کواللہ تعالی سے قبول کروادے گا انشاءاللہ حضرت ابو سعید رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضوراکرم ﷺ نے ایک مرتبہ فرمایا کہ حضرت موسیٰ علیہ السلام نے خداوند سے عرض کیا کہ اے میرے پروردگار مجھے کوئی ایسی چیز بتا دیں جس کے زریعے آپ کو پکاروں اللہ تعالی نے فرمایا اے موسی لا إله إلا الله پڑھ لیا کرو یہ سن کر موسیٰ علیہ السلام نے عرض کی کہ اے میرے پروردگار اس کو تو تیرے سبھی بندے پڑھتے ہیں میں تجھ سے ایسی چیز چاہتا ہوں جو صرف میری حد تک محدود ہو اللہ تعالی نے ارشاد فرمایا اے موسی اس ورد کو معمولی نہ سمجھو ساتوں آسمان اورساتوں زمین اگر ترازو کے ایک پرلے میں رکھ دیا جائے اوردوسرے پرلے میں لا إله إلا الله کو رکھ دیا جائے تو لا إله إلا الله کا پرلہ اس سے زیادہ وزنی ہوگا۔ اب ہم اپنے آج کے وظفیے کی طرف چلتے ہیں اس وظیفہ کے خاص کلمات ہیں اللہ پاک نے حضرت موسیٰ علیہ السلام کو وہ کلمات عطاء فرمائے اس کا فائدہ یہ ہے کہ حضرت موسیٰ علیہ السلام اس کے زریعے سے اللہ تعالی سے جو بھی مانگتے تھے

اللہ پاک ان کو عطاء فرما دیتے۔ حضوراکرم ﷺ کی متعدد حدیث میں اس بارے میں زکرکیا گیا جس کو حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ اور حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالی عنہ سے بھی کئی دفعہ روایت کیا گیا ہے حسن بصری فرماتے ہیں میں نےعبداللہ بن سلام سے ملاقات کی ان سے کہا کہ میں آپ کو ایک ایسی حدیث نہ سنائوں جو میں نے رسول اکرمﷺ سے کئی بار سنی اورحضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ اور حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالی عنہ سے بھی کئی مرتبہ سنی تو انہوں نے فرمایا کہ ظرورآپ مجھے بتا دیجئے تو جب انہوں نے یہ دعا سنی توفرمایا خدا کی قسم میرے ماں باپ حضوراکرم ﷺ پے قربان جائیں۔ یہ وہ کلمات ہیں جو اللہ تعالی نے حضرت موسیٰ علیہ السلام کو عطاء کئے تھے وہ ہردن ایسے سات مرتبہ پڑھا کرتے تھے اورجوبھی اللہ سے مانگا کرتے تھے اللہ پاک اسے ظرورعطاء فرماتے تھے اورجوشخص صبح شام ایسے پڑھے گا اور جو بھی دعا اپنے اللہ سے کرے گا اللہ پاک اس کی دعا قبول فرما دے گا وہ کلمات کیا ہیں جواللہ پاک نے حضرت موسیٰ علیہ السلام کو عطاء کئے ہوئے ہیں اَللّٰھُمَّ اَنْتَ خَلَقْتَنِیْ وَ اَنْتَ تَھْدِیْنِیْ وَ اَنْتَ تُطْعِمُنِیْ وَاَنْتَ تَسْقِیْنِیْ وَاَنْتَ تُمِیْتُنِیْ وَاَنْتَ تُحْیِیْنِی یہ وہ کلمات ہیں وہ دعا ہے جس کے زریعے سے اللہ پاک سے آپ جو بھی مانگیں گے اللہ پاک آپ کو ظرورعطاء فرما دیں گے اس عمل کی خاصیت یہ ہے کہ اللہ پاک نے حضرت موسیٰ علیہ السلام کو یہ کلمات خود سیکھائے ہیں جوحضرت موسیٰ علیہ السلام کے طلب کرنے پران کوعطاء فرمائے تھے۔ یہ کلمات آپ نے صبح کے وقت اورشام کے وقت پڑھنے ہیں اوراس کے ساتھ ساتھ آپ نے نماز کا بھی اہتمام کرنا ہے آپ نے یہ کلمات کے ساتھ ساتھ لا إله إلا الله کا ورد بھی کرنا ہے انشاء اللہ آپ کی جو بھی حاجت ہے اللہ پاک کے حکم سے وہ ظرور پوری ہو کررہے گی آج کا عمل پسند آیا ہو تو لازمی لائک اورشیئر کریں اچھی بات کسی کو بتانا بھی صدقہ جاریا ہے

About admin

Check Also

سورۃ الاعراف سے دنیا اور آخرت کے لاجواب فائدے

644 قرآن پاک کی ویسے تو ہر ہر صورۃ اپنے اندر کمالات کے خزانے چھپائے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *