Home / Health / مالٹے کھانے سے آپ کے جسم میں ایسا تبدیلی واقع ہو گی کہ آپ دیوانے ہو جائے گے

مالٹے کھانے سے آپ کے جسم میں ایسا تبدیلی واقع ہو گی کہ آپ دیوانے ہو جائے گے

سردیوں کا موسم شروع ہوتا ہے تو مارکیٹ میں بھی رنگ برنگے خوشبودار اور خوش ذائقہ پھلوں کی بھرمار ہو جاتی ہے اور ان میں سب سے زیادہ دلکش ذائقے دار پھل مالٹا ہے جو رنگت میں بھی دل کو بھاتا ہے خزاں میں بھی اس کا کوئی ثانی نہیں ہے اس کا تعلق ترشادہ پھلوں کے خاندان سے ہے جس میں کینوں لیموں مالٹا مسمی قابل ذکر ہیں مالٹے کو نہ صرف کھایا جاتا ہے بلکہ اس کا جوس بہت پسند کیا جاتا ہے اس کے علاوہ اس کے چھلکے بڑے کارآمد ہوتے ہیں میں آپ کو اس کی زیادہ سے زیادہ فوائد بچانے کی پوری کوشش کروں گا تاکہ آپ اس پل سے بھرپور فائدہ اٹھا سکے ۔

مالٹے میں بھی ٹائم نسی بکثرت موجود ہوتا ہے لیکن اس کے علاوہ اس میں میگنیشیم پوٹاشیم فاسفورس فولاد تانبا اور جس پیش عمل ہوتے ہیں لیکن ہماری صحت کے لئے بہت مفید اجزاء ہے پاکستان میں مالٹے کی کاشت بڑے پیمانے پر کی جاتی ہے ملکی ضروریات پوری کرنے کے علاوہ مالٹا غیر ممالک میں بھی برآمد کیا جاتا ہے اور اس کی مانگ میں دن بدن اضافہ ہوتا جا رہا ہے زراعت کے ماہرین وقتن فوقتن کاشتکاروں کو نئے نئے طریقوں سے آگاہ کرتے رہتے ہیں تاکہ اس کی پیداوار میں زیادہ سے زیادہ اضافے کو ممکن بنایا جاسکے اب تو کہیں نہیں اقسام دریافت ہوچکی ہیں اور ان کو کامیابی کے ساتھ پاکستان میں کاشت کیا جانے لگا ہے اگر حکومت ملک میں ترشادہ پھلوں کی پیداوار میں اضافہ کرنا چاہتی ہے تو ضروری ہے کہ کاشتکاروں کو تربیت کے علاوہ پودے بھی مہیا کیے جائیں اور ان کو آسان قرضہ فراہم کیے جائیں تاکہ کسان اس کی کاشت کرکے پیداوار میں مزید اضافہ کو ممکن بنا سکے مردے کو ہر عمر کے افراد کا سکتے ہیں

لیکن خواتین کے لئے اس کا استعمال انتہائی ضروری ہے اگر خواتین روزانہ ایک مالٹے کا استعمال کریں تو انکا چہرہ داغ دھبوں دانوں کو جھریوں سے محفوظ رہ سکتا ہے اگر مالٹے کے چھلکوں کو سکھا لیا جائے اور ان کو پیس کر پاؤڈر بنالیا جائے اور اس کو اپنے چہرے پر اپلائی کریں تو یہ چہرہ کو صاف شفاف بنا دیتا ہے وہ چہرہ لکھا جاتا ہے جس سے رنگت بھی صاف ہو جاتی ہے اس کے علاوہ مالٹے کو سکھا کر اس میں شہد ملا کر گولیاں بنا کر بھی کھایا جاسکتا ہے لیکن اگر آپ مالٹے کو اس کی اصل شکل میں کھائیں تو زیادہ بہتر نتائج حاصل ہوتے ہیں مالٹے کے چھلکوں میں بھی استعمال کیا جاتا ہے جس میں ایک الگ سی خوشبو آتی ہے اور وہ ذائقہ دار ہو جاتا ہے جن کی جلد چکنی ہے وہ بھی اس کے چھلکوں کا ماس بناکر لگا سکتے ہیں شوگر کے مریض عام طور پر پھلوں کا استعمال کم کرتے ہیں کیونکہ ان میں چینی کی مقدار زیادہ ہوتی ہے لیکن مالٹے میں کم میٹھاس ہونے کی وجہ سے اس کو شوگر کے مریض بھی استعمال کرسکتے ہیں

لیکن احتیاط ضروری ہے نہایت فائدہ مند ہوتا ہے اس کا جوس مسوڑوں سے خون آنے کو روکتا ہے دانت نکالنے والے بچوں کو اس کا جوس پلایا جائے تو دانت نکالنے میں آسانی ہوتی ہے مالٹے کا جوس پینے سے عمر بڑھتی ہے مالٹے کا جوس چہرہ کی رنگت نکھارتا ہے روزانہ ایک مالٹا کھائیں اور صحت مند رہے ہیں مارنے سے ہمارا نظام انہضام اچھا رہتا ہے بٹر چوس کر پھینکنے کی بجائے اسے بھوک سمیت کھانا چاہیے بھوک سمیت کھانے سے قبض نہیں ہوتی مالٹا بھوک بڑھاتا ہے موٹا کرنا جیسے موذی مرض سے بچا سکتا ہے کھانے سے آپ زیادہ مدت تک جوان رہ سکتے ہیں چہرے کو داغ دھبوں دانوں اور چھائیوں سے محفوظ رکھتا ہے جسم سے گرمی اور زہریلے مادوں کو خارج کرتا ہے مالٹے کے چھلکے کو دانتوں پر ملنے سے دانت سفید ہوتے ہیں مردہ جسم سے پانی کی کمی کو دور کرتا ہے تھکاوٹ کو دور کرتا ہے مالٹا تیزابیت کو ختم کرتا ہے معدہ کو لسٹرول کو نارمل رکھتا ہے مالٹا جسم کو نرم وملائم رکھتا ہے اور خوبصورتی میں اضافہ کرتا ہے مالٹے کا استعمال بلڈ پریشر کے لئے بھی مفید ہے مے خانے سے بریسٹ کینسر کے خلاف قوت مدافعت پیدا ہوجاتی ہے مالٹا رسیلا ترش پھل لوگوں کو پسند بھی بہت ہے جس کے لیے ہر وقت پیٹ میں جگہ نکل ہی آتی ہے مگر کیا آپ کو معلوم ہے کہ اس میں صرف 85 کیلوریز ہوتی ہیں اور چربی کو لسٹرول سوڈیم تو بالکل بھی نہیں ہوتا یہی وجہ ہے کہ اس کے متعدد طبی فوائد بھی ہیں وٹامن سی سے بھرپور یہ پھل جن کے لیے بہتر ثابت ہوسکتا ہے دل کی صحت کا نظام تنفس کے امراض سمیت کینسر سے بھی تحفظ دے سکتا ہے اکثر ترش پھلوں میں وٹامن سی کی مقدار کافی زیادہ ہوتی ہے

اور مالٹے بھی ان میں شامل ہے وٹامن ڈی خلیات کو جسم میں گردش کرنے والے مضر اجزاء یعنی فری ریڈیکل سے تحفظ فراہم کرتا ہے یہ فری ریڈیکلز کینسر اور امراض قلب وغیرہ کا باعث بن سکتے ہیں اسی طرح مالٹے جسمانی دفاعی نظام کو مضبوط کرکے عام روزمرہ کے جراثیموں اور انفیکشن جیسے نزلہ زکام وغیرہ سے بچا سکتے ہیں جن کو جوان اور خوبصورت رکھنے میں مدد دیتا ہے یہ سورج کی روشنی اور آلودگی سے پہنچنے والے نقصان کے خلاف مزاحمت کرتا ہے جبکہ کاریگر نامی ہارمون کی پیداوار کے لیے اہم ترین ہے جس سے جھریوں میں کمی لائی جاسکتی ہے اسی طرح مردوں میں موجود فائبر کولیسٹرول کی سطح میں ممکنہ طور پر قبیلہ سکتی ہے کیونکہ یہ معدے میں موجود کولسٹول کے افی اجزاء کو چونکا جسم سے باہر نکال دیتی ہے ایک تحقیق کے مطابق دو ماہ تک مالٹے کا رس پینے سے نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح میں نمایاں کمی آتی ہے مردوں میں وٹامن سی فائبر پوٹاشیم اور کلام موجود ہوتے ہیں اور یہ سب دل کے لیے فائدہ مند اجزا ہیں ایسا عمل ہے جو جسم میں الیکٹرک سٹی یا برقی رو کے بہاؤ کو برقرار رکھتا ہے اس کی کمی دل کی دھڑکن میں بے ترتیبی کا باعث بنتی ہے تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ روزانہ 4069 ملی گرام پوٹاشیم کا استعمال امراض قلب سے موت کا خطرہ 50 فیصد تک کم کردیتا ہے اسی طرح بلڈ پریشر میں کمی لاکر فالج سے بھی تحفظ دیتا ہے اور مالٹوں میں موجود مختلف اجزاء خون کی شریانوں کے مختلف خطرات کو کم کرتے ہیں اسی طرح فائبر سے بھرپور ہونے کے باعث ماڈل ٹائون شوگر کے شکار افراد میں بلڈ شوگر لیول کم کرنے میں مدد دیتے ہیں جبکہ شوگر ٹائپ ٹو کے مریضوں میں بلڈ شوگر اور انسولین کے لیول کو بہتر کرتے ہیں امریکن ٹائپ پی ٹی ایسوسی ایشن نے تو مار ٹوکو شوگر کے شکار افراد کے لیے سپرفوڈ کی فہرست میں شامل کر رکھا ہے اسی طرح فائبر نظام ہاضمہ کو بہتر بنانے کے لیے ضروری ہوتا ہے

جبکہ وزن میں کمی لانے کے لیے بھی مددگار جو زہیب مالٹوں میں چربی یا فیٹ نہیں ہوتے اور یہ گلاس میں انڈیکس کی سطح کم کرتے ہیں اور موٹاپے سے بچاؤ کے لیے بہترین غذا ہے جو کہ امراض قلب کینسر شوگر ہائی بلڈ پریشر اور فالج کا باعث بنتا ہے اسی طرح مارتے وٹامن اے سے بھرپور ہوتے ہیں اور یہ جسم میں جاکر لیوٹین اور بیٹا کیروٹین جیسے اجزاء میں تبدیل ہو جاتے ہیں جو کہ عمر بڑھنے کے ساتھ بھلائی کو پیش آنے والے مسائل سے بچانے میں مدد دیتے ہیں روشنی جذب کرنے میں مدد دیتا ہے جبکہ رات کی بینائی کو بہتر بناتا ہے ایک تحقیق کے مطابق وٹامن سی کے خطرے کو بھی کم کرتا ہے آنتوں کے کینسر کا خطرہ بھی کم کرتا ہے ایک تحقیق کے مطابق بچوں کو کھیلوں اور مالٹے کے رس کا استعمال کرانا انہیں خون کے کینسر سے تحفظ دے سکتا ہے صحت کے لیے فائدہ مند ہے مگر ان اعتدال سے کھا کر ہی لطف اندوز ہونا چاہیے ماہرین طب کے مطابق بہت زیادہ مالٹے کھانے کے نتیجے میں مضر اثرات کا سامنا ہوسکتا ہے بخار اور کھانسی کی صورت میں بھی ثابت ہوتا ہے گودا نکال کر شکر چھڑک کر توے پر رکھ کر معمولی سے ان کے اور کھاں جائیں اس بظاہر معمولی نسخے سے بخار اور کھانسی ختم ہو جاتی ہے

اور پیدا ہو جاتے ہیں تو مریض کی حالت بہت خراب ہوجاتی ہے ایسی صورت میں مالٹے کا گودا متلی روکنے کے لئے بہت موثر ہوتا ہے اسی طرح مالٹے کا رس دل کے لیے فرحت بخش اور بھوک بڑھاتا ہے مالٹے کے رس میں خون کی خرابی دور کرنے کی صلاحیت بھی ہوتی ہے اس کے گودے سے ایک پاؤ رس نچوڑ کر پانی میں تین پوشکر حل کرکے اس کا شربت تیار کرلی اب چھے گرام شرائط ایک بوٹی ہے جو پنساری سے مل جائے گی رات کو ایک پیالی پانی میں بھگودیں صبح چرائتہ اچھی طرح رگڑ کر پانی چھان لیں پھراس پانی میں تقریبا 35 گرام نارنگی کا شربت ملا کر صبح نہار منہ یعنی ناشتے سے تھوڑی دیر قبل بھی اس طرح نظام ہاضمہ درست ہو جائے گا وہ خوب لگے گی خون صاف ہو جائے گا اور پھوڑے پھنسیاں نکلنا بند ہو جائیں گی بخار کی زیادتی اور بے چینی دور کرنے کے لیے مالٹے کا رس پانی میں ملا کر تھوڑی تھوڑی دیر بعد پینے سے بخار کم ہو جاتا ہے اور پیاس بجھاتی ہے یہ شربت اکثر صفرادی امراض دور کرنے میں مفید ہے اسی طرح مالٹا تو معدے اور جگر کی حدت اور سوزش کو ختم کر نے کا فائدے سے خالی نہیں اس کا چھلکا بھی کھو دیتا ہے ان کی معمولی مقدار ڈال کر پینے سے پیٹ کے کیڑے ہلاک ہوجاتے ہیں

About admin

Check Also

پیاز سے بال پھر سے گھنے بنائیں گھریلو ٹوٹکہ

133 بہت سے لوگ بال گرنے کی وجہ سے پریشان رہتے ہیں، اگرچہ روزانہ 50سے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *